Webhosting in Pakistan
Results 1 to 7 of 7

Thread: بلڈپریشرمیں کمی لانا

  1. #1
    M Aziz's Avatar
    M Aziz is offline Senior Member+
    Last Online
    20th July 2017 @ 04:59 PM
    Join Date
    11 Dec 2016
    Age
    23
    Gender
    Male
    Posts
    203
    Threads
    59
    Credits
    1,793
    Thanked
    34

    Default بلڈپریشرمیں کمی لانا

    Webhosting in Pakistan
    السلام علیکم
    بلڈ پریشر کو خاموش قاتل بھی کہا جاتا ہے جو امراض قلب یا فالج وغیرہ کا خطرہ سنگین حد تک بڑھا دیتا ہے۔

    یہ مرض ہر تین میں سے ایک بالغ فرد کو لاحق ہوتا ہے جس کی مختلف وجوہات ہوسکتی ہیں اور اس کو کنٹرول میں رکھنے کے لیے ادویات مددگار ثابت ہوتی ہیں۔

    تاہم قدرتی طور پر بھی آپ اپنے طرز زندگی میں چند عادات اپنا یا بدل کر اس پر قابو پاسکتے ہیں۔

    ایسے سات طریقے جن کے ذریعے بلڈ پریشر کو نارمل رکھا جا سکتا ہے وہ درج ذیل ہیں۔

    ورزش

    جسمانی سرگرمیاں فشار خون سے بچانے میں مددگار ثابت ہوتی ہیں۔ درحقیقت ورزش کو معمول بنالینا جسم پر زبردست اثرات مرتب کرتا ہے اور یہ بلڈ پریشر کو مستحکم رکھنے کا ایک بہترین ذریعہ بھی ہے، ہفتہ بھر میں کم از کم 30 منٹ سے ایک گھنٹے کی ورزش بلڈ پریشر کی سطح کو کم رکھتی ہے، یہاں تک کہ صرف چہل قدمی کی عادت ہی دل کی صحت کیلئے بہترین ہے۔

    سانس

    آہستگی اور گہری سانسیں لینا بھی آپ کو پرسکون رہنے اور بلڈ پریشر میں کمی لانے میں مدد دیتی ہیں، سانس کی ورزشوں سے دل کی دھڑکن کو بہتر بنایا جاسکتا ہے جس کے نتیجے میں خون کی شریانیں بھی زیادہ لچکدار ہوجاتی ہیں۔

    پرسکون رہنا

    بہت زیادہ تناﺅ خون کے ابلنے کا سبب بنتا ہے کم از کم کچھ دیر کیلئے ضرور ایسا ہوتا ہے۔ امریکن ہارٹ ایسوسی ایشن کے مطابق تناﺅ سے دل کی دھڑکن کی رفتار بڑھ جاتی ہے جبکہ خون کی رگیں سکڑ جاتی ہیں، جس سے بلڈ پریشر کچھ وقت کیلئے بڑھ جاتا ہے۔ تناﺅ اور ذہنی صحت کو معمول پر رکھنا مجموعی صحت کیلئے بہت ضروری ہے، جس کا بہترین ذریعہ کچھ دیر کیلئے تمام تناﺅ اور الجھنیں بھلا کر گھومنا ہے۔

    کافی کا کم استعمال

    یہ ان لوگوں کے لیے ہے جو کافی پینا پسند کرتے ہیں، اگر آپ ہائی بلڈ پریشر کے شکار نہیں تب بھی کیفین کے زیادہ استعمال سے گریز زیادہ بہتر ہوگا، کیونکہ یہ عنصر دل کی دھڑکن کی رفتار اور بلڈ پریشر کو بڑھا دیتا ہے۔ ابھی یہ تو واضح نہیں کیفین سے بلڈ پریشر کیوں بڑھتا ہے مگر ایسا ہوتا ضرور ہے، اس لئے دن بھر میں 4 کپ سے زیادہ کافی کا استعمال بلڈپریشر کا مریض بنادینے کیلئے کافی ہے۔

    چائے کو زیادہ نوش کریں

    چائے کا استعمال طویل المعیاد بنیادوں پر بلڈ پریشر کو بہتر بناتا ہے، ایک تحقیق کے مطابق بارہ ہفتوں تک چائے کا استعمال بلڈ پریشر کی سطح کو 2.6 mmHg اسٹولک اور 2.2 mmHg ڈایاسٹولک کم کرتا ہے، اس حوالے سے سبز چائے سب سے زیادہ فائدہ مند ہے جس کے بعد دودھ کے بغیر چائے کا نمبر ہے۔

    تمباکو نوشی سے گریز

    سیگریٹ میں شامل نکوٹین بلڈ پریشر کو بڑھاتا ہے، تو جو لوگ دن بھر بے تحاشہ تمباکو نوشی کرتے ہیں ان کا بلڈ پریشر ہمیشہ بڑھا ہوا ہی آتا ہے، جس سے گریز امراض قلب اور فالج وغیرہ سے تحفظ کیلئے بہترین ثابت ہوتا ہے۔

    دہی کو غذا کا حصہ بنائیں

    دہی میں شامل پروبایوٹیکس بلڈ پریشر کو صحت مند سطح پر رکھنے میں مدد دیتے ہیں، ایک تحقیق کے مطابق دہی میں شامل یہ جز بلڈ پریشر میں کمی لاکر کولیسٹرول کو بہتر جبکہ بلڈ شوگر کی سطح کو بھی کم کرتا ہے۔

    نوٹ: یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین اس حوالے سے اپنے معالج سے بھی ضرور مشورہ لیں۔

  2. #2
    Join Date
    09 Nov 2005
    Location
    @itdunya.com
    Age
    34
    Gender
    Male
    Posts
    20,509
    Threads
    1110
    Credits
    21,703
    Thanked
    4764

    Default

    وعلیکم السلام،۔۔ بہت ہی بہترین ۔۔ جتنی بھی تعریف کی جائے کم ہوگی۔۔۔۔ آج سے میری کافی کم،۔۔۔۔۔۔۔۔۔
    آپ سے اس نئے سیکشن کے حوالے سے بہت ہی بہترین معلومات مل رہی ہے۔۔ امید ہے آپ اپنی بہترین علم ہم سے شیئر کرتے رہینگے۔۔
    شیئر کرنے کا بہت بہت شکریہ۔۔۔

    Quote Azizshakir said: View Post
    السلام علیکم
    بلڈ پریشر کو خاموش قاتل بھی کہا جاتا ہے جو امراض قلب یا فالج وغیرہ کا خطرہ سنگین حد تک بڑھا دیتا ہے۔

    یہ مرض ہر تین میں سے ایک بالغ فرد کو لاحق ہوتا ہے جس کی مختلف وجوہات ہوسکتی ہیں اور اس کو کنٹرول میں رکھنے کے لیے ادویات مددگار ثابت ہوتی ہیں۔

    تاہم قدرتی طور پر بھی آپ اپنے طرز زندگی میں چند عادات اپنا یا بدل کر اس پر قابو پاسکتے ہیں۔

    ایسے سات طریقے جن کے ذریعے بلڈ پریشر کو نارمل رکھا جا سکتا ہے وہ درج ذیل ہیں۔

    ورزش

    جسمانی سرگرمیاں فشار خون سے بچانے میں مددگار ثابت ہوتی ہیں۔ درحقیقت ورزش کو معمول بنالینا جسم پر زبردست اثرات مرتب کرتا ہے اور یہ بلڈ پریشر کو مستحکم رکھنے کا ایک بہترین ذریعہ بھی ہے، ہفتہ بھر میں کم از کم 30 منٹ سے ایک گھنٹے کی ورزش بلڈ پریشر کی سطح کو کم رکھتی ہے، یہاں تک کہ صرف چہل قدمی کی عادت ہی دل کی صحت کیلئے بہترین ہے۔

    سانس

    آہستگی اور گہری سانسیں لینا بھی آپ کو پرسکون رہنے اور بلڈ پریشر میں کمی لانے میں مدد دیتی ہیں، سانس کی ورزشوں سے دل کی دھڑکن کو بہتر بنایا جاسکتا ہے جس کے نتیجے میں خون کی شریانیں بھی زیادہ لچکدار ہوجاتی ہیں۔

    پرسکون رہنا

    بہت زیادہ تناﺅ خون کے ابلنے کا سبب بنتا ہے کم از کم کچھ دیر کیلئے ضرور ایسا ہوتا ہے۔ امریکن ہارٹ ایسوسی ایشن کے مطابق تناﺅ سے دل کی دھڑکن کی رفتار بڑھ جاتی ہے جبکہ خون کی رگیں سکڑ جاتی ہیں، جس سے بلڈ پریشر کچھ وقت کیلئے بڑھ جاتا ہے۔ تناﺅ اور ذہنی صحت کو معمول پر رکھنا مجموعی صحت کیلئے بہت ضروری ہے، جس کا بہترین ذریعہ کچھ دیر کیلئے تمام تناﺅ اور الجھنیں بھلا کر گھومنا ہے۔

    کافی کا کم استعمال

    یہ ان لوگوں کے لیے ہے جو کافی پینا پسند کرتے ہیں، اگر آپ ہائی بلڈ پریشر کے شکار نہیں تب بھی کیفین کے زیادہ استعمال سے گریز زیادہ بہتر ہوگا، کیونکہ یہ عنصر دل کی دھڑکن کی رفتار اور بلڈ پریشر کو بڑھا دیتا ہے۔ ابھی یہ تو واضح نہیں کیفین سے بلڈ پریشر کیوں بڑھتا ہے مگر ایسا ہوتا ضرور ہے، اس لئے دن بھر میں 4 کپ سے زیادہ کافی کا استعمال بلڈپریشر کا مریض بنادینے کیلئے کافی ہے۔

    چائے کو زیادہ نوش کریں

    چائے کا استعمال طویل المعیاد بنیادوں پر بلڈ پریشر کو بہتر بناتا ہے، ایک تحقیق کے مطابق بارہ ہفتوں تک چائے کا استعمال بلڈ پریشر کی سطح کو 2.6 mmHg اسٹولک اور 2.2 mmHg ڈایاسٹولک کم کرتا ہے، اس حوالے سے سبز چائے سب سے زیادہ فائدہ مند ہے جس کے بعد دودھ کے بغیر چائے کا نمبر ہے۔

    تمباکو نوشی سے گریز

    سیگریٹ میں شامل نکوٹین بلڈ پریشر کو بڑھاتا ہے، تو جو لوگ دن بھر بے تحاشہ تمباکو نوشی کرتے ہیں ان کا بلڈ پریشر ہمیشہ بڑھا ہوا ہی آتا ہے، جس سے گریز امراض قلب اور فالج وغیرہ سے تحفظ کیلئے بہترین ثابت ہوتا ہے۔

    دہی کو غذا کا حصہ بنائیں

    دہی میں شامل پروبایوٹیکس بلڈ پریشر کو صحت مند سطح پر رکھنے میں مدد دیتے ہیں، ایک تحقیق کے مطابق دہی میں شامل یہ جز بلڈ پریشر میں کمی لاکر کولیسٹرول کو بہتر جبکہ بلڈ شوگر کی سطح کو بھی کم کرتا ہے۔

    نوٹ: یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین اس حوالے سے اپنے معالج سے بھی ضرور مشورہ لیں۔

    Click Here to View All My Important Threads (Afridi)

    وتُعِزُّ مَنْ تَشَاءُ وَتُذِلُّ مَنْ تَشَاءُ
    اور تو جسے چاہے عزت دے اور جسے چاہے ذلت دے۔
    Pakistan Zindabad


  3. #3
    Umarkhan147's Avatar
    Umarkhan147 is offline Advance Member
    Last Online
    6th June 2019 @ 09:00 AM
    Join Date
    22 Dec 2015
    Location
    Faisalabad
    Age
    24
    Gender
    Male
    Posts
    4,878
    Threads
    242
    Credits
    34,655
    Thanked
    301

    Default

    ﺑﮩﺖ ﺍﭼﮭﯽ ﺷﯿﺌﺮﻧﮓ ﮐﯽ
    ﮨﻤﺎﺭﮮ ﺳﺎﺗﮫ ﺷﯿﺌﺮ ﮐﺮﻧﮯ ﮐﺎ ﺑﮩﺖ ﺷﮑﺮﯾﮧ

  4. #4
    miss ch is offline Junior Member
    Last Online
    30th January 2017 @ 01:14 PM
    Join Date
    19 Jan 2017
    Gender
    Female
    Posts
    16
    Threads
    0
    Credits
    86
    Thanked: 1

    Default

    boht achi malumat hain , lakin aj kal k time main har kisi ka b.p high rehta hai , is ly hmain sb ko in sb bato ko mad e nazr rakhna chahy

  5. #5
    Join Date
    16 Aug 2009
    Location
    Makkah , Saudia
    Gender
    Male
    Posts
    16,454
    Threads
    281
    Credits
    75,311
    Thanked
    890

    Default

    Thanks for Sharing

  6. #6
    eido is offline Junior Member
    Last Online
    24th November 2017 @ 11:28 AM
    Join Date
    03 Jun 2017
    Age
    24
    Gender
    Male
    Posts
    13
    Threads
    2
    Credits
    141
    Thanked
    0

    Default

    Nice

  7. #7
    jamalmaster is offline Member
    Last Online
    4th March 2019 @ 08:21 AM
    Join Date
    08 Sep 2018
    Location
    کر&
    Gender
    Male
    Posts
    187
    Threads
    5
    Thanked
    2

    Default

    Webhosting in Pakistan
    تو کیا یہ سب کرنے کے بعد ہم نمک کا استعمال کرسکتے ہیں میں نے سنا ہے بلڈ پریشر نمک کی زیادتی کی وجہ سے ہوتا ہے آپ نے اس بارے میں کچھ نہیں بتایا

Similar Threads

  1. Replies: 8
    Last Post: 30th December 2018, 11:06 PM
  2. Replies: 62
    Last Post: 27th December 2016, 08:17 PM
  3. Replies: 3
    Last Post: 13th October 2011, 12:45 AM

Bookmarks

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •